لذت

لذتیں وقتی اور ہنگامی ہوتی ہیں  لیکن مسرتیں ،  شادمانیاں مستقل ہوتی ہیں -  لذتوں کا جسم سے تعلق ہوتا ہے  اور خوشیوں کا روح سے ۔ شادمانی نفس اور وجود سے ہٹ کر ہوتی ہے - یہ نفس سے جنگ کا دوسرا نام  ہوتا ہے - نفس سے جنگ روح کو خوشی عطا کرتی ہے جبکہ خواہشات کے آگے سر تسلیم خم کرنے سے جسمانی لذتیں میسر آتی ہیں ، روح کو بالیدگی نہیں ملتی - ۔

اشفاق احمد زاویہ 3  صاحب السیف  صفحہ 272