غرض

جو اپنی غرض کے لیے تم سے دوستی رکھے ، اس کی دوستی  سے ہٹ جاؤ ۔ 
اشفاق احمد بابا صاحبا  صفحہ560