الرحمٰن

  بسم اللہ الرحمٰن الرحیم    
شروع اللہ کے نام  سے جو بڑا  مہربان بڑے رحم والا ہے 

 فرمایا : صاحبو ! اللہ تعالیٰ پاک ہے ۔ پاک ہی اسے پا سکتا ہے ۔ یہ پاکی اللہ کے محبوب سے عطا ہوتی ہے ۔ اور اس کی بدولت مخلوق کے ساتھ  پورا رہنے کا ذاتی اور صفاتی علم عطا ہوتا  ہے ۔  الرحمٰن کی یہ شان ہے کہ وہ رحم کرتا ہے ۔ اورجب کوئی مقصود سے دور ہو رہا ہو،  تو  اسے قریب کرنے کے لیے سختی بھی کرتا ہے ۔ مگر یہ سختی وقتی ہوتی ہے ۔ پھر اس کا رحم ہی ہوتا ہے ۔ یہ اللہ کا کرم ہے ۔ جس  پر اللہ کا کرم ہو اسے قریب کر دے ۔ اس طرح بسم اللہ  عمل سے ہوتی ہے ۔ ورنہ قول کی تکرار سچا  ثابت ہونے کے لیے درکار نہیں ۔ جس قول کا عمل شاہد نہ ہو وہ قول سچا ثابت نہیں ہوتا ۔ 

 اشفاق احمد بابا صاحبا  صفحہ 625