نظرانداز کرکے مرکزی مواد پر جائیں

خدا کی برابری؟ نعوذ باللہ۔۔۔

مثال کے طور پر یہ سمجھ لیجے کہ ایک تو کوئی دوست برابر کا اور یارِ قدیم کوئی حکم کرے تو اس کی وجہ پوچھتے ہیں۔ اور اگر کوئی حاکم حکم کرے تو ہر گز وجہ دریافت نہیں کرتے، من و عن تسلیم کرلیتے ہیں۔ چنانچہ جب خدا تعالیٰ کے احکام کی وجہ دریافت کی جاتی ہے تو شبہ یہ پڑتا ہے کہ ان کے دل میں حق تعالیٰ کی عظمت نہیں ہے اور وہ (نعوذ باللہ) خدا کو برابر کا جانتے ہیں۔

اشفاق احمد بابا صاحبا صفحہ 616