معاشرتی بگاڑ

جو قومیں تباہ و برباد ہوئیں وہ متکبر تھیں ۔ اپنی اچھائیوں پر بھی اتراتی تھیں اور برائیوں پر بھی فخر کرتی تھیں ۔ خدا کی نعمتوں کو اپنی محنت کا صلہ قرار دیتی تھیں ۔ یہ بات کرنے کا مقصد کسی کو ڈرانا مقصود نہیں بلکہ آپ کو ، اپنے آپ کو تنبیہ کرنا مقصد ہے ۔ 
آپ نہ صرف اللہ کی مہربانیوں کا شکر ادا کیا کریں بلکہ جو کوئی آپ پر احسان کرے اس کا شکریہ ادا کریں ۔ اس سے معاشرے کی کئی بگاڑ ختم ہو سکتے ہیں ۔  

اشفاق احمد زاویہ 3  ناشکری کا عارضہ  صفحہ 14